Shua-e-Aftab- Bang-e-Dara | Allama Iqbal Poetry | شعاع آفتاب

شعاع آفتاب

Shua-e-Aftab

 

 

صبح جب ميري نگہ سودائي نظارہ تھي
آسماں پر اک شعاع آفتاب آوارہ تھي

Subah Jab Meri Nigah Soudai-e-Nazara Thi
Asman Par Ek Shua-e-Aftab Awara Thi

 

ميں نے پوچھا اس کرن سے اے سراپا اضطراب
تيري جان ناشکيبا ميں ہے کيسا اضطراب

Main Ne Pucha Uss Kiran Se Ae Sarapa Iztarab!
Teri Jaan-e-Na-Shakeeba Mein Hai Kaisa Iztarab

 

تو کوئي چھوٹي سي بجلي ہے کہ جس کو آسماں
کر رہا ہے خرمن اقوام کي خاطر جواں

Tu Koi Choti Si Bijli Hai Ke Jis Ko Asman
Kar Raha Hai Khirman-e-Aqwam Ki Khatir Jawan

 

يہ تڑپ ہے يا ازل سے تيري خو ہے، کيا ہے يہ
رقص ہے، آوارگي ہے، جستجو ہے، کيا ہے يہ
؟

Ye Tarap Hai Ya Azal Se Teri Khu Hai, Kya Hai Ye
Raqs Hai, Awargi Hai, Justujoo Hai, Kya Hai Ye?

 

خفتہ ہنگامے ہيں ميري ہستي خاموش ميں
پرورش پائي ہے ميں نے صبح کي آغوش ميں

Khufta Hungame Hain Meri  Hasti-e-Khamosh Mein
Parwarish Payi Hai Main Ne Subah Ki Aghosh Mein

 

مضطرب ہر دم مري تقدير رکھتي ہے مجھے
جستجو ميں لذت تنوير رکھتي ہے مجھے

Muztarib Har Dam Meri Taqdeer Rakhti Hai Mujhe
Justujoo Mein Lazzat-e-Tanveer Rakhti  Hai Mujhe

 

برق آتش خو نہيں، فطرت ميں گو ناري ہوں ميں
مہر عالم تاب کا پيغام بيداري ہوں ميں

Barq-e-Atish Khu Nahin, Fitrat Mein Go Naari Hun Main
Mehr-e-Alam Tab Ka Paigham-e-Baidari Hun Main

 

سرمہ بن کر چشم انساں ميں سما جائوں گي ميں
رات نے جو کچھ چھپا رکھا تھا، دکھلائوں گي ميں

Surma Ban Kar Chashm-e-Insaan Mein Sama Jaun Gi Main
Raat Ne Jo Kuch Chupa Rakha Tha, Dikhlaun Gi Main

 

تيرے مستوں ميں کوئي جويائے ہشياري بھي ہے
سونے والوں ميں کسي کو ذوق بيداري بھي ہے؟

Tere Maston Mein Koi Jooya’ay Hoshiyari Bhi Hai
Sone Walon Mein Kisi Ko Zauq-e-Baidari Bhi Hai?

 

 

 

 

Walida Marhooma Ki Yaad Mein- Bang-e-Dara | Allama Iqbal Poetry | والدہ مرحومہ کی ياد ميں

Tehzeeb-e-Hazir -Tazmeen-e-Barshair-e-Faizi- Bang-e-Dara | Allama Iqbal Poetry | تہذيب حاضر – تضمين بر شعر فيضی

Siddique (R.A.)- Bang-e-Dara | Allama Iqbal Poetry | صديق رضی اللہ عنہ

2 thoughts on “Shua-e-Aftab- Bang-e-Dara | Allama Iqbal Poetry | شعاع آفتاب

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *